پاکستانی عالمی شہر یا ہفتہ سائنسدانوں کے ڈاکٹر عطاالرحمان اعزاز میں شہریوں سے متعلق تحقیقات جریدہ مالیکیولز ایک خصوصی شمارہ جلد شائع ہوتی ہیں۔ فوٹو: فائل

پاکستانی عالمی شہر یا ہفتہ سائنسدانوں کے ڈاکٹر عطاالرحمان اعزاز میں شہریوں سے متعلق تحقیقات جریدہ مالیکیولز ایک خصوصی شمارہ جلد شائع ہوتی ہیں۔ فوٹو: فائل

کراچی: پاکستان کے معروف سائنسدان ، استاد اور ماہرِ تعلیم پروفیسر ڈاکیٹر عطا الرحمن کی دنیا کے مختلف ممالک میں سائنس اور ٹیکنالوجی کو فروغ دینے کی قدرتی خدمات کو شہروں کے شہریوں کی سطح پر ایک اہم شہروں کی جرنل “مالیکیولز” اس کے ساتھ خصوصی طور پر جانا نہیں پڑا۔ ہے۔

بین الاقوامی شہر مرکز کیمیائی اور حیاتیاتی علوم (آئی سی سی بی ایس) جامعہ کراچی کے ترجمان کے مطابق اس جرنل کی اشاعت معروف شہریوں کے پبلشر ایم ڈی پی آئیکے کے تحت ہے۔ ترجمان نے کہا کہ اس عالمی جریدے سے متعلق عالمی سائنس سائنس سوسائٹی منسلک جنوری میں انٹر نیشنل سوسائٹی آف نیوکلیوسائیڈز ، نیوکلیوٹائڈز اینڈنیوکلیک ایسڈ ، اسپینش سوسائٹی آف جنڈی کیمسٹری ، اور ٹرین نیشنل سوسائٹی آف ہیٹرروسیکلک کیمسٹری شامل ہیں۔ ترجمان کے مطابق اس شمارے میں پروفیسر عطاالرحمن کی قدرتی خدمات کو کوشاں ہیں۔

واضح ہے کہ پروفیسر عطاالرحمن کامسٹیک کوارڈینیٹر جنرل اسلامیہ اسلامی دنیا کے چالیس ممالک میں ہزاروں نوجوان سائنسدانوں کی معاونت اور ان کے استعداد کار میں اضافے کے ل کئی مختلف مراحل ہیں۔ پاکستان میں وفاقی وزیر سائنس سائنس اور ٹیکنالوجی سے ملک میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کی بنیاد اور اس طرح کے شہروں ، قصابوں اور دیہاتوں میں انٹرنیٹ کی سہولت عام ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کا پہلا سیٹلائیٹ پاک سیٹ میں خلا میں بھیجنا اہم کردار ہے۔ اس کے ساتھ موبائل فون انڈسٹری میں بھی اہم تبدیلیاں آئیں اور سال 2000 میں ء فون تعداد میں جہاں موبائل فون کی تعداد صرف تین لاکھ تھی جو وہ 160 میل تک پہنچا تھا۔

بحیثیت بانی کے ایک اعلی تعلیمی کمیشن نے 2002 ء سے سن 2008 ء کے درمیانی ملکی تعلیمی شعبے میں نمایاں تبدیلیاں رونما کی اور تحقیقی مقالات کی اشاعت میں ہندوستان کو بھی چھوڑ دیا تھا۔

واضح رہے کہ اب پروفیسرعطا الرحمن وزیر پاکستان کی طرف سے ٹاسک فورس سائنس اور ٹیکنالوجی کمیٹی ، سائنس اور ٹکنک پر مبنی معیشت کی تشکیل ٹاسک فورس کے وائس چیئر مین اور ٹاسک فورس کے ذریعہ انفارمیشن ٹیکنالوجی کی خدمات موجود ہیں۔

پروفیسر عطا الرحمن کے نامیاتی کیمیکل کے موضوع پر 1232 سے زیادہ شہروں کی تحقیقات اشاعت ، امریکہ ، یورپ اور جاپان میں طباعت شدہ 346 کتب اور شہری شہر سائنسی جرائد میں 771 سے زیادہ تحقیقی اشارے قابل ذکر ہیں۔ ان کی زیر نگرانی 82 طالب علموں نے پی ڈی ڈی کی سندھی حاصل کی۔ پروفیسر عطا الرحمن آٹھ یورپی ریسرچ جرنل کے مدیر اعلی طبقہ سے متعلق مضمون سے متعلق دنیا کی نمایاں انسائیکلوپیڈیا کے مدیر بھی ہیں۔ پروفیسر عطاء الرحمن کو صرف حکومتوں نے ہی پاکستان سے کوئی فائدہ نہیں اٹھایا ، لیکن تمغہ امتیاز ، ستارہ امتیاز ، ہلال امتیاز اور نشانِ امتیاز بھی کچھ نہیں ہے۔



Source by [author_name]

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here